شیخ مجیب الرحمان کے قاتل کو پھانسی دیدی گئی، کیپٹن عبدالمجید کوبھارت سے گرفتار کرکے لایا گیا

ڈھاکا :بنگلہ دیش کے بانی شیخ مجیب الرحمان کے قتل میں ملوث ایک سابق فوجی کیپٹن عبدالماجد کو سزا سنائے جانے کے 25؍ سال کے بعد پھانسی دیدی گئی۔

بنگلادیش کے بانی شیخ مجیب الرحمان کے قتل میں ملوث سابق فوجی افسر کیپٹن عبدالمجید کو 25سال بعد گرفتار کرلیا گیا۔ 

غیرملکی خبررساں ایجنسی کے مطابق شیخ مجیب الرحمان کے قاتل عبدالمجید کو منگل کے روز گرفتار کیا گیا تھا۔ شیخ مجیب کو 15 اگست 1975 کو فوجی بغاوت کے دوران قتل کردیا گیا تھا جس کے بعد ان کے قتل کے الزام میں متعدد فوجیوں کو گرفتار کیا گیا تھا۔ 

عدالتی کارروائی کے دوران ہی عبدالمجید مبینہ طور پر بھارت فرار ہوگیا تھا۔عبدالمجید کو بھارت سے گرفتار کرکے لایا گیا۔ تاہم بعد ازاں 1998 میں مقامی عدالت نے عبدالمجید سمیت ایک درجن فوجی افسروں کو شیخ مجیب کے قتل کے الزام میں پھانسی کی سزا سنائی تھی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں