کلبھوشن نے ریویو پٹیشن فائل کرنے سے انکار کردیا، کلبھوشن کو اس کے والد سے ملاقات کی اجازت دیدی گئی

اسلام آباد: بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو نے اپنے فیصلے کے خلاف ریویو پٹیشن فائل کرنے سے انکار کردیا ہے

بھارتی نیوز چینل کے اسلام آباد میں نمائندے انس ملک کے مطابق پاکستانی حکام نے کلبھوشن یادیو کو سزا کے خلاف ریویو پٹیشن فائل کرنے کا موقع دیا تھا۔ تاہم کلبھوشن یادیو نے ریویو پٹیشن فائل نہ کرنے کا فیصلہ کیا۔ اس کا اصرار تھا کہ اس کی رحم کی اپیل پر فیصلہ دیا جائے۔ کلبھوشن نے اپنی سزا کے خلاف رحم کی اپیل کی ہوئی ہے۔

پاکستان اور بھارت کا لیگل سسٹم ایک جیسا ہی ہے۔ اس لیئے ہر فیصلے کے لیئے ریویو پٹیشن فائل کی جاسکتی ہے۔ کلبھوشن کے انکار سے لگ رہا ہے کہ وہ جانتا ہے کہ ریویو پٹیشن میں معاملہ مزید کئی سال تک چلے گا۔ اسے امید ہے کہ اس کی رحم کی اپیل پر کوئی مثبت فیصلہ آسکتا ہے۔

وزارت خارجہ نے کلبھوشن یادیو کو اس کے والد سے ملاقات کی اجازت بھی دیدی ہے. انس ملک کے ٹوئٹ کے مطابق وزارت خارجہ کے ڈائریکٹر جنوبی ایشیا حفیظ چوہدری نے بتایا کہ کلبھوشن یادیو کو قونصلررسائی فراہم کرنے کی پیشکش کی گئی ہے۔ اور اب اس پر بھارت کی طرف سے جواب کا انتظار ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں