کے الیکٹرک جھوٹ بول رہی ہے، سوئی سدرن گیس کا جواب

بزنس رپورٹر کراچی سے: سوئی سدرن گیس کمپنی کا کہنا ہے کہ کے الیکٹرک جھوٹا دعوی کررہی ہے۔ سوئی سدرن گیس کمپنی کی طرف سے کے الیکٹرک کو گیس کی سپلائی مسلسل جاری ہے۔

کراچی میں جاری لوڈ شیڈنگ کی وجہ کے الیکٹرک کمپنی نے گیس کی سپلائی میں کمی اور فرنس آئل کی قلت قرار دی تھی۔ اب سوئی سدرن کمپنی نے اپنا موقف جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ سوئی سدرن کمپنی کے الیکٹرک کو پہلے کے مقابلے میں 50ملین میٹرکیوبک فیٹ گیس زیادہ فراہم کررہی ہے۔ سوئی سدرن کے مطابق کے الیکٹرک کو 190ایم ایم سی ایف ڈی گیس فرہام کی جارہی تھی جس کی مقدار کے الیکٹرک کی درخواست پر 240 ایم ایم سی ایف ڈی کردی ہے۔دو روز قبل کے الیکٹرک نے مزید گیس مانگی تو گیس کی فراہمی میں مزید 50ایم ایم سی ایف ڈی کا اضافہ کیا اور کل سپلائی 290ایم ایم سی ایف ڈی کردی ہے۔ اس طرح گیس کی وجہ سے بجلی کی تیاری میں قلت نہیں ہوسکتی۔

سوئی سدرن نے کہا کہ کے الیکٹرک کراچی کے عوام کو گمرا کررہی ہے۔ اسوقت بھی معمول سے پچاس ایم ایم سی ایف ڈی گیس زیادہ فراہم کی جارہی ہے۔

کراچی میں ہرسال شدید گرمیوں میں لوڈ شیڈنگ بڑھ جاتی ہے۔ چند سال قبل ہیٹ ویو میں کی وجہ سے کئی سو افراد جان کی بازی ہار گئے تھے اس دوران بھی شہر میں شدید لوڈ شیڈنگ کی گئی تھی۔ کے الیکٹرک کی طرف سے اضافی بلوں پر نیپرا نے بھی نوٹس لیا ہے۔

کراچی الیکٹرک کی نجکاری کے ذمہ دار موجودہ وزیر خزانہ حفیظ شیخ ہیں جنہوں نے مشرف دور میں بطور وزیر نجکاری کے ای ایس سی کو نجی شعبے کو فروخت کردیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں