میچ فکسنگ: عمر اکمل پر تین سال کے لیئے پابندی

اسپورٹس رپورٹر لاہور سے: پاکستان کرکٹ بورڈ نے میچ فکسنگ کے الزام میں عمر اکمل پر تین سال کے لیئے پابندی عائد کردی ہے۔ عمر اکمل پر اینٹی کرپشن کوڈ کی خلاف ورزی کرنے کا جرم ثابت ہوا ہے۔ پی سی بی ڈسپلنری کمیٹی نے آج اپنا فیصلہ سنا دیا

عمر اکمل نے پی سی بی کی چارج شیٹ کا جواب اکتیس مارچ کو جمع کرایا تھا جس کی تصدیق پی سی بی نے کردی تھی

عمر اکمل پر پی سی بی کے الزامات

پاکستان کرکٹ بورڈ کا کہنا تھا کہ عمر اکمل نے پی سی بی کے اینٹی کرپشن قوانین کی خلاف ورزی کی تھی

ـپی سی بی نے الزام لگایا تھا کہ عمر اکمل سے میچ فکسنگ کرنے والے بکیز نے دو بار رابطہ کیا اور انہوں نے پی سی بی کی ویجیلنس اور سیکوریٹی ڈیپارٹمںٹ کو مکمل معلومات فراہم نہیں کیں۔

{پی سی بی کے الزامات کی پریس ریلیز }

عمر اکمل کو بیس فروری 2020کو پی ایس ایل میچز سے کچھ روز پہلے پی سی بی نے معطل کردیا تھا۔ پی سی بی کا کہنا تھا کہ ان کے بکیز سے رابطے کے الزامات ہیں۔ کوئٹہ گلاڈیٹرز کو فوری طور پر متبادل کھلاڑی لینے کی اجازت دی گئی تھی۔

یہ علم نہیں ہوسکا کہ کیا میچ فکسنگ کی کوشش پی ایس ایل میں کی گئی تھی یا یہ معاملہ کسی اور ٹور کا ہے۔ اس سے پہلے آئی پی ایل میں میچ فکسنگ کا انکشاف ہوچکا ہے جس کے نتیجہ میں آئی پی ایل کی ساکھ بری طرح متاثر ہوئی تھی۔ پی سی بی نے آئی پی ایل کی صورتحال دیکھتے ہوئے اپنے اینٹی کرپشن کے اقدامات انہتائی سخت کردیئے تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں